موجودہ مقام براق
مکان ام ہانی رضی الله تعالی عنہا

===============================================


مسجد الحرام کی جدید تعمیر کے بعد وہ ستوں جہاں براق باندھا گیا تھا اور جہاں سے آپ صلی الله علیہ وسلم نے معراج کے سفر کا آغاز کیا تھا کچھ اس طرح نظر اتے ہیں جو آج کی اھلا'' تصویر میں پیش کیے گیے ہیں -

اغلب امکان ہے کہ لال ڈاٹ والا ستوں اس مقام کی نشان دہی کر رہا ہے جہاں براق بندھا گیا تھا جبکہ فیروزی ڈاٹ والا ستوں اس مقام کو ظاہر کر رہا ہے جہاں سے آپ صلی الله علیہ وسلم نے سفر معراج کا آغاز کیا تھا - یہ مقام اس وقت مسجد الحرام سے باہر تھا اور آپ صلی الله علیہ وسلم کی چچا زاد بہن ام ہانی رضی الله تعالی عنہا کا گھر تھا جہاں معراج کی رات رسول مکرم صلی الله علیہ وسلم آرام فرما رہے تھے کہ اچانک یہ آسمانوں میں سفر کا معجزہ رونما ہوا -

==========
شب اسرا و معراج پر دل کی ترجمانی کرتے ہوے دو عاجزانہ کلام کہنے کی سعادت اس خاکی بندے '' وسیم احمد خاکی'' نے حاصل کی جس میں سے ایک حاضر خدمت ہے -
یہ کلام کچھ پرانے اھلا'' لوورز کے لیے '' مکرر '' ہے -

شب معراج === وسیم احمد خاکی
=======================
جب آپ تھے براق پر محو سفر
سو رہے تھے لوگ بستروں میں بے خبر

ملایک حیران تھے یہ دیکھ کر افلاک پر
کہ کیوں کھلا ہے آج عرش برین کا در

بولے جبریل ، جل جائیں گے انکے پر
بڑھے منتہی سے اگے انکے قدم اگر

پھر تنہا کیا آپ نے لا مکاں کا سفر
رہ گیا پیچھے کہیں وہ بیری کا شجر

پھر فایز ہوے آپ قابھ قوسین پر
اور رب نے کیا نماز کا تحفہ آپکی نذر

ساتھہ فرمایا جو کرے گا پنجگانہ کی قدر
اسکوملے گا دنیا و آخرت میں اسکا اجر

پھر کیا رب کا دیدار آپ نے بھر کے نظر
شب معراج جنتوں سے بھی ہوا اپکا گزر

یہ تھا تاریخ انسانی کا ایسا معجزاتی سفر
جس کی تعظیم میں تھم گےتھے سب بحر و بر
===============================================



LIST PAGE

NEXT PAGE

PREVIOUS PAGE